ایرانی بلوچستان میں ہلاک 9 افراد کی میتیں پاکستان کے حوالے کردی گئیں

0
38

مغربی بلوچستان میں گذشتہ دنوں نامعلوم مسلح افراد کے حملے میں ہلاک ہونے والے 9 پاکستانیوں کی میتیں پاکستانی حکام کے حوالے کردی گئی ہیں۔

بلوچستان وایران کے گولڈ اسمتھ سرحد کے راہداری گیٹ پر ایرانی بارڈر سکیورٹی گارڈز نے میتیں پاکستانی حکام کے حوالے کیں۔

مارے گئے افراد میں ملک اظہر ولد نذیر حسین سکنہ علی پور،محمد شعیب ولد نذیر احمد سکنہ مظفر گڑھ، نذیر احمد ولد غلام محمد جان سکنہ مظفر گڑھ، محمد اکمل سکنکہ علی پور مظفر گڑھ، محمد ابوبکر ولد غلام یاسین سکنہ لودھراں، شہریار ولد غلام حسین سکنہ ملتان، شبیر احمد ولد محمد نواز سکنہ لیہ، محمد ندیم ولد گلزار سکنہ بہاولپور اور محمد شہزاد ولد عبدالمالک سکنہ بہاولپور شامل ہیں۔

اسسٹنٹ کمشنر تفتان وقار کاکڑ نے پاکستانی باشندوں کی میتیں وصول کیں۔

اس موقعے پر زاہدان میں متعین پاکستانی قونصل جنرل صدیق بلوچ بھی موجود تھے۔

چاغی کے ڈپٹی کمشنر طفیل بلوچ نے بتایا کہ میتیں سیندک کے جوزک ایئر پورٹ سے خصوصی طیارے کے ذریعے پنجاب روانہ کر دی گئیں۔

یاد رہے کہ ان پاکستانی باشندوں کو 26 اور27 جنوری کی درمیانی شب بلوچستان کے ضلع پنجگور سے ملحقہ ایران کے مغربی بلوچستان کے شہر سراوان میں نامعلوم افراد نے فائرنگ کرکےہلاک کر دیا تھا۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here